Tuesday, November 30, 2004

فلسطینی حقِ واپسی

کچھ دنوں پہلے پاکستانی اخبار ڈان نے فلسطینی پناہ گیروں کے حقِ واپسی پر ایک پراثر اداریہ شائع کیا۔ اقوامِ متحدہ کی قرارداد ۱۹۴، انسانی حقوق کے عالمی منشور کی دفعہ ۱۳(۲)، اور چوتھی جنیوا کنونشن ہر پناہ گیر کو اپنے وطن لوٹنے کا حق دیتیں ہیں۔ اگر بینالاقوامی قانون کی دنیا میں کوئی حیثیت ہے تو حقِ واپسی کو جھٹلایا نہیں جا سکتا۔ لیکن کیا پاکستانی اخبار میں ایسی بات ہونے سے منافقت کی بو نہیں آتی؟

میرے والد صاحب کے ایک بچپن کے دوست تقسیم کے وقت اپنے خاندان سمیت پناہ گیر بن گئے تھے۔ ان کی پیدائش سندھ کی ہے اور ان کے آباؤ اجداد صدیوں سے کراچی کے قریب ایک گاؤں میں آباد تھے۔ ۱۹۴۷؁ میں ان کا سارا کنبہ سندھ سے بھاگ کر جےپور آپہنچا۔ آج وہ بےپناہ چاہنے کے باوجود بھی اپنے آبائی گاؤں نہیں جاسکتے۔ کیا ڈان اخبار کے مدیر میرے منہ بولے چچا اور ان کے جیسے لاکھوں ہندؤں کے لیے بھی حقِ واپسی طلب کریں گے؟

تقسیم کے سوال کو چھوڑیے۔ بنگلہ دیش میں جو لاکھوں مہاجرین کی حالتِ زار ہے، کیا اس کے بارے میں ڈان نے کبھی اداریہ لکھا ہے؟ یہ لوگ اپنے آپ کو پاکستانی کہتے ہیں۔ بنگلہ دیش میں انہیں شہریت نہیں مل سکتی۔ لیکن کیا پاکستانی حکومت ۱۵ کڑوڑ کی آبادی میں چند لاکھ مہاجرین کو خوش آمدید کہ رہی ہے؟ تو پھر ڈان کے مدیر اسرائیل سے کیوں مطالبہ کر رہے ہیں کے وہ ۶۷ لاکھ کی آبادی میں ۴۰ لاکھ میاجرین کے لیے جگہ بنائے؟

تبصرے  (7)

Anonymous Anonymous

Dude, how do i post the comment in urdu? -A

5:51 PM  
Blogger Zack

بالکل صحیح کہا آپ نے۔

آپ کا بلاگ پسند آیا۔ اردو بلاگز کے ویب رنگ میں اس کو شامل کریں۔

http://www.zackvision.com/urdu/

--
Zack
http://www.zackvision.com/weblog/

4:27 PM  
Blogger ضیا

شکریہ زیک! آپ کا ویب رنگ کا خیال بہت خوب ہے۔

9:04 PM  
Anonymous Anonymous

You have an outstanding good and well structured site. I enjoyed browsing through it Michigan avenue rowe sofa Laminating kitchen counter tops Cpu family affiliate program megafitness

4:26 AM  
Anonymous Anonymous

Best regards from NY! Mortgage rates wichita kansas Black fat girls porn

10:42 AM  
Anonymous Anonymous

What a great site »

2:58 PM  
Anonymous Anonymous

Looking for information and found it at this great site... Orange watches Interior design job postings

12:29 AM  

تبصرہ کیجیے

کیفے حقیقت