Thursday, December 02, 2004

بروس وین: قاتل؟

بیٹ مین کا ایک اصول ہے: تشدّد کا استعمال جائز ہے لیکن ایک انسان کو کسی بھی صورت میں قتل نہیں کیا جاسکتا۔ باوجود اس کے کہ جوکر نے دوسرے رابن جیسن ٹاڈ کو بری طرح جان سے مار دیا تھا، بیٹ مین نے جوکر کو زندہ رہنے دیا۔ یہی اصول ہے جو بیٹ مین کو جوکر جیسے خونیوں سے منفرد کرتا ہے۔ اس اصول کی تقدیس پڑھنے والوں کے ذہنوں پر اس بری طرح چھائی ہوئی ہے کے بروس وین: مرڈرر کا پہلا ورق پلٹنے سے پہلے ہی ہر سچّے مداح کو یقین ہونا چاہیے کہ بروس بے گناہ ہے۔



بروس کی بےگناہی تو کوئی تعجب کی بات نہیں۔ بیٹ مین: مرڈرر کا کمال ایک انوکھے خیال میں ہے۔ آج تک سب سمجھتے آئے ہیں کہ بروس حقیقی انسان ہے اور بیٹ مین صرف ایک نقاب۔ لیکن اگر حالات اس کے بر عکس ہوں تو کیسا رہے، یعنی کہ بیٹ مین حقیقی ہو اور بروس وین صرف ایک نقاب! یہی بروس وین: مرڈرر کا مرکزی خیال ہے۔

ویسے تو ہم سب نقاب پہنتے ہیں۔ فرق یہ ہے کہ بروس کا نقاب مکمل ہے، جسے پہن کر اس کی شخصیت ہی تبدیل ہو جاتی ہے۔ اصل صلاحیت صرف نقاب پہنّے میں نہیں بلکہ کئی نقاب اس طرح اتارنے چڑھانے میں ہے کہ انسان کی تمام شکلیں ایک دوسرے سے جدا رہیں۔